اللہﷻ کے لئے حمدو ثنا ہے جب بھی رات آئے اور اندھیرا پھیلے اور اللہ ﷻکے لئے تعریف و توصیف ہے جب بھی ستارہ نکلے اور ڈوبے اور اس اللہﷻ کے لئے مدح و ستائش ہے کہ جس کے انعامات کبھی ختم نہیں ہوتے اور جس کے احسانات کا بدلہ اتارا نہیں جا سکتا۔

(آگاہ رہو کہ ) میں نے فوج کا ہراول دستہ آگے بھیج دیا ہے اور اسے حکم دیا ہے کہ میرا فرمان پہنچنے تک اس دریا کے کنارے پڑاؤ ڈالے رہے اور میرا ارادہ ہے کہ اس پانی کو عبور کر کے اس چھوٹے سے گروہ کے پاس پہنچ جاؤں جواطراف دجلہ (مدائن ) میں آباد ہے اور اسے بھی تمہارے ساتھ دشمنوں کے مقابلہ میں کھڑا کروں اور انہیں تمہاری کمک کےلئے ذخیرہ بناؤں ۔

علامہ رضی کہتے ہیں کہ امیر الموٴمنین علیہ السلام نے اس مقام پر ملطاط سے وہ سمت مرا دلی ہے جہاں انہیں ٹھہرنے کا حکم دیا تھا اور وہ سمت کنارہ فرات ہے اور ملطاط کنارہ دریا کو کہا جاتا ہے، اگرچہ اس کے اصل معنی ہموار زمین کے ہیں اور نطفہ (صاف و شفاف پانی ) سے آپ کی مراد آبِ فرات ہے اور یہ عجیب و غریب تعبیرات میں سے ہے ۔