یہ عہدہ تمہارے لیے کوئی آزوقہ نہیں ہے بلکہ وہ تمہاری گردن میں ایک امانت کا پھندا ہے۔ اورتم اپنے حکمران بالاکی طرف سے حفاظت پرمامور ہو۔ تمہیں یہ حق نہیں پہنچتا کہ رعیت کے معاملہ میں جو چاہو کر گزرو۔ خبردار ! کسی مضبوط دلیل کے بغیر کسی بڑے کام میں ہاتھ نہ ڈالاکرو۔تمہارے ہاتھوں میں خدائے بزرگ وبرتر کے اموال میں سے ایک مال ہے،اورتم اس وقت تک اسکے خزانچی ہو جب تک میرے حوالے نہ کردو۔بہرحال میں غالباتمہارے لیے براحکمران تونہیں ہوں ۔ والسلام